Poetry

Zindgi Aysh main guzaari hay | Azeem Kamil

Spread the love

زندگی عیش میں گزاری ہے

پھول جیسوں کی پاسداری ہے

Zindgi Aysh main guzaari hay

Phool jeson ki paas’daari hay !

گِریہ تم پر نہیں پسند ہمیں

جان کر خود سے جنگ ہاری ہے

Girya tum par nhi pasand hamain

Jaan kar khud sy jang haari hay !

تیرا جانا رُکا ہے آنکھوں میں

ہر گھڑی اِن میں اشک باری ہے

Tera jana ruka hy Aankhon main

Har ghari in main Ashq’baari hay !

کیوں یہاں  اُول فول بَکتا ہے

بعد میں صرف شرمساری ہے

Kiyon yahan oul foul bakta hay

Baad main sirf sharm’saari hay!

دُشمنوں کو بھی اُٹھ کے ملتا ہے

اُس میں اِتنی تو بُردباری ہے

DushmanO’n ko bhi uth ky milta hy

Us main itni to burd’baari hay !

اب  کُھلے دل سے کر رہے ہیں تباہ

زندگی سے بھی جنگ جاری ہے

Ab khulay dil sy kar rahy hain tabah

Zindgi say bhi jang jaari hay !

مجھ کو وِرثے میں جو ملی کامل

سوگواری ہی سوگواری ہے

Mujh ko virsay main jo mili kamil

Sogawari hi sogawari hay !

عظیم کامل

Azeem Kamil

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *