Poetry

Bari zilat uthani parh gaye hai | Azeem Kamil

Spread the love

بڑی ذلّت اُٹھانی پڑ گئی ہے

مجھے وہ خود منانی پڑ گئی ہے

 

مرے آگے بہت اترا رہی تھی

اُسے گردن جُھکانی پڑ گئی ہے

 

سعادت کو پڑھا ہے جب سے میں نے

محبت آزمانی پڑ گئی ہے

 

بہت بدنام ہوتے جا رہے تھے

زرا عزت کمانی پڑ گئی ہے

 

یہ دریا بھینٹ کوئی چاہتا ہے

کہانی پھر پرانی پڑ گئی ہے

 

عظیم کامل

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *