Poetry

Lutf aye ga mujh ko jeene mein | Azeem Kamil

Spread the love

لطف آئے گا مجھ کو جینے میں

لگ گئی آگ میرے سینے میں

اب میں اتنا کہاں تڑپتا  ہوں

رکھ لیا دل تجھے نگینے میں

زندگی اب فلاح پا لے گی

دل مرا لگ گیا مدینے میں

میں اُسے کیسے بھُول جاؤں دوست

بات کچھ ایسی ہے کمینے میں

ایک یہ غم کے ہوگیا مجھ کو

دوسرا پیار اس مہینے میں

یہ صِفت ہے ہمارے آقا کی

خوشبوئیں آبسی پسینے میں

میں بھی اُن میں سے ہوں جو بیٹھے تھے

حضرت ِ نوح کے سفینے میں

عظیم کامل ۔۔۔۔۔

Also read : Dil se tujh ko nikalain kese hum | Azeem Kamil

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *