NewsPakistanUrdu News

لاڑکانہ کے بعد کراچی میں بھی ایچ آئی وی ایڈز پھیلنے کا انکشاف

Spread the love

کراچی: لاڑکانہ کے بعد کراچی میں بھی آئیوی کا انکشاف ہوا ہے۔ شہر میں اب تک 6،768 کیس رپورٹ ہوئے ہیں۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق ، سندھ کی کمیونیکیبل ڈیزیز کنٹرول (سی ڈی سی) (ایچ آئی وی / ایڈز) رپورٹ جاری کی جا رہی ہے اور یہ سب سے زیادہ کراچی کے وسطی ضلع سے متاثر ہے جہاں 2،725 کیسز ہیں ، جنوبی ضلع میں 1،035 ، ضلع میں 998 کیسز ہیں۔ ، ضلع کورنگی میں 907 ، ضلع ملیر میں 666 اور مشرقی ضلع میں 436۔ لاہور میں کیسز کی کل تعداد 2،430 ہے جبکہ حیدرآباد میں کیسز کی تعداد ایک ہزار تک پہنچ گئی ہے۔

ایک محتاط اندازے کے مطابق سندھ میں 70،000 سے 78،000 کے درمیان صرف 13،834 ایچ آئی وی رجسٹرڈ ہیں۔ متاثرین میں 9166 مرد ، 2،461 خواتین ، 1،126 لڑکے ، 730 لڑکیاں اور 421 خواجہ سرا شامل تھے۔ اب تک 1،939 افراد ایچ آئی وی / ایڈز سے اپنی جانیں گنوا چکے ہیں۔

ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل متحدہ سندھ امراض پاکستان میں سرنجوں کا استعمال سالانہ 800 ملین ہے جو کہ دنیا میں سب سے زیادہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ خواجہ سرا ، جنسی کارکن ، مرد جنسی کارکن ، منشیات کے عادی سب سے زیادہ متاثر ہوتے ہیں ، ہیلتھ سندھ IV کو کنٹرول کرنے میں بہت سرگرم ہے ، مختلف پروگرام شروع کیے گئے ہیں۔ جتنی جلدی ممکن ہو پایا جائے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *