Poetry

اس کی آنکھوں میں محبت کا ستارہ ہوگا

Spread the love

اس کی آنکھوں میں محبت کا ستارہ ہوگا
ایک دن آئے گا وہ شخص ہمارا ہوگا

زندگی اب کے مرا نام نہ شامل کرنا
گر یہ طے ہے کہ یہی کھیل دوبارہ ہوگا

جس کے ہونے سے مری سانس چلا کرتی تھی
کس طرح اس کے بغیر اپنا گزارہ ہوگا

عشق کرنا ہے تو دن رات اسے سوچنا ہے
اور کچھ ذہن میں آیا تو خسارہ ہوگا

کون روتا ہے یہاں رات کے سناٹوں میں
میرے جیسا ہی کوئی ہجر کا مارا ہوگا

جو مری روح میں بادل سے گرجتے ہیں وصیؔ
اس نے سینے میں کوئی درد اتارا ہوگا

کام مشکل ہے مگر جیت ہی لوں گا اس کو
میرے مولا کا وصیؔ جوں ہی اشارہ ہوگا

.::ALSO READ::.
یہ کامیابیاں عزت یہ نام تم سے ہے
سوچتا ہوں کہ اسے نیند بھی آتی ہوگی
دکھ درد میں ہمیشہ نکالے تمہارے خط

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button