Poetry

فلک پہ چاند کے ہالے بھی سوگ کرتے ہیں

Spread the love

وصی شاہ
46
فلک پہ چاند کے ہالے بھی سوگ کرتے ہیں

جو تو نہیں تو اجالے بھی سوگ کرتے ہیں

تمہارے ہاتھ کی چوڑی بھی بین کرتی ہے

ہمارے ہونٹ کے تالے بھی سوگ کرتے ہیں

نگر نگر میں وہ بکھرے ہیں ظلم کے منظر

ہماری روح کے چھالے بھی سوگ کرتے ہیں

اسے کہو کہ ستم میں وہ کچھ کمی کر دے

کہ ظلم توڑنے والے بھی سوگ کرتے ہیں

تم اپنے دکھ پہ اکیلے نہیں ہو افسردہ

تمہارے چاہنے والے بھی سوگ کرتے ہیں

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button