News

سانحہ مری کے محرکات کی رپورٹ وزیراعلیٰ پنجاب کو پیش کردی گئی

Spread the love

سانحہ مری کے محرکات سے متعلق رپورٹ وزیر اعلیٰ پنجاب لاہور کو پیش کر دی گئی۔ محکمہ موسمیات نے کسی غیر معمولی برف باری کی اطلاع نہیں دی۔ 5 فٹ سے زیادہ برفباری کی اطلاع نہیں ملی۔ ۔ اے آر وائی نیوز کے مطابق راولپنڈی ڈویژن انتظامیہ کی جانب سے سانحہ مری کی ابتدائی رپورٹ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو پیش کردی گئی۔ چلا گیا
رپورٹ میں الزام لگایا گیا کہ محکمہ موسمیات نے کسی غیر معمولی برف باری کی اطلاع نہیں دی، پانچ فٹ سے زیادہ برف نہیں پڑی۔

رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ مری جانے والی سڑکیں 6 جنوری کی رات سے بند کر دی گئی تھیں، اخبارات میں اشتہارات بھی دیے گئے تھے لیکن پھر بھی سیاحوں کی بڑی تعداد مری پہنچ گئی۔ برف باری سے خیبر پختونخواہ کا بڑا حصہ متاثر ہوا ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے سانحہ مری کی تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔ انہوں نے ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ انہیں مری واقعے پر شدید دکھ ہوا ہے۔ ایسا کیے بغیر عوام نے مری کا رخ کیا۔ ضلعی انتظامیہ اس صورتحال کے لیے تیار نہیں تھی۔ یہ صورتحال خراب موسم اور لوگوں کے رش کی وجہ سے پیش آئی۔
انہوں نے کہا کہ مری میں سانحہ کی تحقیقات کا حکم دے دیا گیا ہے۔ مشہور سیاحتی مقام مری میں شدید برف باری کے باعث ہزاروں سیاح پھنس گئے جس سے مری جانے والی سڑکیں بند ہوگئیں۔ بتایا گیا ہے کہ برف باری کا مشاہدہ کرنے سیاحوں کی بڑی تعداد مری پہنچی جہاں ایک لاکھ سے زائد گاڑیاں مری اور گلیات میں داخل ہو گئیں جس سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو گیا۔ اہل خانہ گاڑیوں میں پھنس گئے۔ رپورٹ کے مطابق مری میں شدید برفباری کے باعث ہزاروں گاڑیاں پھنس گئیں اور 21 افراد جاں بحق ہوگئے۔ شدید برف باری میں پھنسے سیاحوں کو نکالنے کے لیے آپریشن جاری ہے۔

.:::ALSO READ :::.
خود 5 ہزار ڈالر پر بکنے والا 2 لاکھ کیسے ٹھکرا سکتا ہے؟ سلیم ملک
معیشت مضبوط ہورہی ہے ملازمتوں کے مواقع پیدا ہورہے ہیں، وزیراعظم
پیپلز پارٹی کا حکومت کے خلاف لانگ مارچ کا اعلان

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button